پاکستان میں کین سائینو ویکسین کی قیمت 1000 روپیے ہونی چاہئے تھی،ٹرانسپرنسی انٹر نیشنل نے اسد عمر کے نام مراسلہ لکھ دیا

اسلام آباد (این این آئی)ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل نے سربرا� این سی اوسی اسدعمر کے نام مراسل� لکھا �ے جس میں سندھ حکومت کی ویکسین خریداری پر تح�ظات کا اظ�ار کیا گیا۔مراسلے میں ک�ا گیا ک� سندھ حکومت نجی سیکٹرسیکوروناویکسین خریدر�ی �ے،

سندھ نجی سیکٹر سے10لاکھ ویکسین ڈوزخرید ر�ا �ے سندھ نجی سیکٹرسیکین سائینوویکسین خریدر�ا�ے ،سندھ کمپنی کے بجائے مڈل مین سے خریداری کرر�ا�ے۔ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل نے ک�ا ک� سندھ کی ویکسین خریداری و�اقی احکامات کیخلا� �ے سندھ کی نجی سیکٹر سے ویکسین خریداری غیرقانونی �ے سندھ ڈریپ کیمقرر� ریٹ پرویکسین خریدر�ا�ے ،سندھ نجی سیکٹرسیویکسین م�نگے داموں خریدر�ا�ے، نجی سیکٹرسے خریداری پرخزانے کو3ارب نقصان �وگا۔ٹرانسپرنسی انٹرنیشنل نے ک�ا ک� کین سائینونے �ی ڈوزقیمت سنگل ڈیجٹ امریکی ڈالر�ے، پاکستان میں کین سائینو ویکسین کی قیمت1000روپے �ونی چا�ئے تھی تا�م ڈریپ نے نجی سیکٹرکیلئے کین سائینوویکسین کی قیمت 4225 مقررکی �ے، ڈریپ نے کین سائینوکی قیمت پرائسنگ پالیسی سے 323 گنا زائد رکھی �ے، ڈریپ کی مقرر� قیمت پر خریداری سیقومی خزانے کونقصان �وگا۔ٹی آئی کا ک�نا �ے ک� این سی اوسی صوبوں کوویکسین خریداری کے بارے میں احکامات جاری کرے، صوبوں کو منظور شد� کمپنیزسے برا� راست خریداری کاحکم دے۔

. پاکستان میں کین سائینو ویکسین کی قیمت 1000 روپیے �ونی چا�ئے تھی،ٹرانسپرنسی انٹر نیشنل نے اسد عمر کے نام مراسل� لکھ دیا ..

dadaddadd

اپنا تبصرہ بھیجیں