حکومت نے جون 2020 تک کتنے ارب ڈالرز کے بھاری قرضے لئے، حکومت کی دو سالہ کارکردگی کا پول سٹیٹ بینک کی رپورٹ نے کھول دیا

لاہور (آن لائن)غیر ملکی زر مبادلہ کے ذخائر میں اضافے کا ڈھنڈورا پیٹنے والے حکمران قوم کو پورا سچ بتائیں۔ پی ٹی آئی حکومت کی دو سالہ کارکردگی کا پول اسٹیٹ بینک رپورٹ نے پول کھول دیا ہے۔ ان خیالات کا اظہار پاکستان مسلم لیگ فنکشنل کے مرکزی نائب صدر مقصود بٹ نے اپنے بیان میں کیا۔ انہوں نے کہا کہ اسٹیٹ بینک کی رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے کہ حکومت نے

جون 2020 تک 101ارب ڈالر بیرونی قرضے لئے۔ جس کے مطابق دو سالوں میں بیرونی قرضوں کی مد میں 16 ارب ڈالر کا اضافہ ہوا۔ انہوں نے کہا کہ دو سالوں میں سٹیٹ بینک کے غیر ملکی زر مبادلہ کے ذخائر میں صرف 2ارب ڈالرکا اضافہ ہوا۔ انہوں نے کہا کہ حکومتی ترجمان آدھا سچ بول رہے ہیں پورا سچ یہ ہے دو سالوں میں 16 ارب ڈالر کے مزید بیرونی قرض لئے گئے۔ انہوں نے کہا کہ حکومتی وزرا اور ترجمان اس بات پر فخر کر رہے ہیں کہ ہمارے غیر ملکی زر مبادلہ کے ذخائر بڑھ کر 12 ارب ڈالر ہو گئے ہیں لیکن یہ نہیں بتاتے کہ غیر ملکی زر مبادلہ کے ذخائر میں یہ اضافہ قرضوں سے ہوا ہے۔ مقصود بٹ نے مزید کہا کہ ملکی درآمدات میں کمی کا کریڈٹ لینے سے پہلے حکومت یہ بھی عوام کو بتائے کہ خام مال کی درآمدات میں کمی سے برآمدات پر براہ راست کتنا منفی اثر پڑ سکتا ہے۔ دو سالوں میں بیرونی قرضوں کے ساتھ ساتھ اندرونی قرضوں میں بھی 6980 ارب روپے کا اضافہ ہوا۔ اس طرح اندرونی و بیرونی قرضے ملا کر تقریباً 9634 ارب روپے کا اضافہ ہوا۔ یہ سارے قرضے حکومتی اخراجات کو پورا کرنے کے لیے لئے گئے۔ پچھلے دو سالوں میں ٹیکس کی آمدنی تقریباً 9000 ارب روپے رہی اور تقریباً اتنا ہی قرضہ لیا گیا۔ جس کا مطلب ہے کہ حکومت جب 100 روپے خرچ کرتی ہے تو اس میں سے پاکستانی عوام صرف 50 روپے ٹیکس کی صورت میں دیتے ہیں اور باقی 50 روپے

اندرونی اور بیرونی قرضہ جات سے پورے کئے جاتے ہیں۔ یہ صرف موجودہ حکومت میں نہیں ہو رہا۔ یہی صورت حال پچھلے 10 سالوں سے چلی آ رہی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ جب تک ٹیکس کا تناسب قومی آمدنی کے 15 فیصد تک نہیں پہنچا ملک کے مالی حالات خراب ہی

رہیں گے اور ہر سال قرضہ لے کر گزارہ کرنے پڑے گا۔ مقصود بٹ کا کہنا تھا کہ ٹیکس 2018 میں ٹیکس کا تناسب 13 فیصد تھا جو اس وقت کم ہوکر 9 فیصد تک رہ گیا ہے۔ حکومت صرف اسی ایک مسئلہ کو حل کر لے تو اس کے سارے مسائل خود بخود حل ہو جائیں گے۔

. حکومت نے جون 2020 تک کتنے ارب ڈالرز کے بھاری قرضے لئے، حکومت کی دو سالہ کارکردگی کا پول سٹیٹ بینک کی رپورٹ نے کھول دیا ..

dadaddadd

اپنا تبصرہ بھیجیں