بس بہت ہو گیا، مطالبات پورے نہ ہونے کی صورت میں سرکاری ملازمین نے بھی تہلکہ خیز اعلان کر دیا

سرگودھا(این این آئی)اپیکا نے اپنے مطالبات حق میں ملک گیر ہڑتال کی کال دیتے ہوئے اعلان کیا کہ اگر گورنمنٹ نے 20اکتوبر تک چارٹر آف ڈیمانڈز کو پورا کر کے منظوری کا نوٹیفکیشن نہ دیا تو ملازمین 22 اکتوبر اور 29 اکتوبر کو پنجاب کے

تمام اضلاع میں بھرپور احتجاج، جلسے، جلوس اور ریلیاں نکالیں گے جبکہ ڈپٹی کمشنرز دفاتر کے سامنے دھرنا دیا جائے گا۔مرکزی انفارمیشن سیکرٹری ملک منور اقبال نے بتایا کہ اگر ٹوکن احتیاج کے باوجود پنجاب گورنمنٹ نے مراعات کی منظوری نہ دی تو دس نومبر کو 10بجے دن سیون کلب وزیر اعلی ہاس لاہور کے سامنے احتجاج اور دھرنا ہو گا جس میں پنجاب کے تمام اضلاع سے ایپکا کے شاہین بھرپور شرکت کریں گے جو ان ڈیمانڈز کے حصول تک جاری ساری رہے گا ۔انہوں نے کہا کہ ایپکا کے شاہین اپنے اپنے محکمہ جات ضلع صوبے اور پورے پاکستان میں ایپکا کو مزید فعال اور منعظم تنظیم بنانے کے لیے اپنا اپنا رول ادا کریں گے اور پاکستان کے تمام سرکاری ملازمین کو ایک پلیٹ فارم پر اکٹھے کرنے کے لئے ہر ممکن کوشش کی جائے گی اور 10نومبر کو سیون کلب لاہور کے سامنے بھرپور احتجاجی دھرنا دیں گے انہوں نے کہا کہ اپنے حقوق کے حصول کے لیے کسی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے۔

. بس بہت ہو گیا، مطالبات پورے نہ ہونے کی صورت میں سرکاری ملازمین نے بھی تہلکہ خیز اعلان کر دیا ..

dadaddadd

اپنا تبصرہ بھیجیں