مطالبہ پورا! جنوبی پنجاب کے بعد ایک اور بڑا صوبہ،حکومت نے آئین میں ترمیم کا فیصلہ کر لیا

اسلام آباد(ویب ڈیسک) کیا گلگت بلتستان علیحدہ صوبہ بننے جارہا ہے؟ حکومت نے گلگت بلتستان کو مشروط صوبائی حیثیت دینے کیلئے آئین میں ترمیم کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق وفاقی حکومت کے کچھ رہنماؤں نے میڈیا کو بتایا ہے کہ حکومت نے گلگت بلتستان کو مشروط صوبائی حیثیت دینے کے

لیے آئین پاکستان میں ترمیم کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔وزارت قانون کے افسران نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا ہے کہ یہ فیصلہ گلگت بلتستان کے عوام کی خواہشات کو مدنظر رکھتے ہوئے کی گیا ہے کہ اب گلگت بلتستان کو الگ صوبائی حیثیت دی جائے۔وزارت قانون کے مطابق اسی سلسلے میں آئین کے آرٹیکل ایک اور 51 میں ترامیم کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ انہوں نے یہ بھی بتایا کہ اس کے علاوہ آرٹیکل 257 اور 258 میں بھی ترامیم کی جائیں گی۔1947 سے انتظامی طور پر پاکستان ہی کے زیر کنٹرول ہونے کے باوجود فی الحال گلگت بلتستان کو ابھی تک بطور فیڈریشن پاکستان میں صوبائی حیثیت حاصل نہیں ہوئی اور اس کا آئینی یا سیاسی طور پر بھی پاکستان میں حصہ نہیں ہے۔حکومت پاکستان کی جانب سے 29 اگست2009 کو ایک سیلف امپاورمنٹ آرڈر منظور کیا گیا جس میں صدر پاکستان کی منظوری کے بعد گلگت کی ایک اپنی حکومت بنا دیا گئی جہاں اس وقت راجہ جلال حسین بطور گورنر اور ڈی آئی جی ریٹائرڈ میر افضل خان بطور وزیراعلیٰ اپنی ذمہ داریاں نبھا رہے ہیں۔یاد رہے کہ گلگت کی اسمبلی اور سپریم ایپلٹ کورٹ بھی علیحدہ سے قائم کی گئی ہے۔

dadaddadd

اپنا تبصرہ بھیجیں