31جنوری کی ڈیڈ لائن بھی تبدیل اپوزیشن نے دھرنے اور مستعفی ہونے کی نئی تاریخ دیدی

اسلام آباد،کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک،این این آئی )نجی ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے مسلم لیگ (ن) کے سینئر رہنما رانا ثنا اللہ نے کہا ہے کہ پی ڈی ایم کے دھرنے کے لیے جنوری کے پہلے یا دوسرے ہفتے کا موسم موزوں نہیں ہے ، اس لیے ایک تجویز یہ ہے کہ جب اسلام آباد پہنچ

کر لانگ مارچ اختتام پذیر ہو تو وہاں جاکر حکومت کو ایک اور الٹی میٹم دیا جائے جو کہ 23 مارچ یا 23اپریل کا ہوسکتا ہے۔ن لیگی رہنما نے مزید کہا کہ اس وقت تک اگر حکومت مستعفی نہ ہوتو بعد میں پھر ایک نئے لانگ مارچ کی صورت میں جانے کی تجویز بھی زیر غور ہے کیونکہ اس کے بعد 23 مارچ سے 23 اکتوبر تک کا موسم ایسا ہے کہ جس میں بڑے آرام سے دھرنا دیا جاسکتا ہے۔دوسری جانب سابق صدر مملکت آصف زرداری نے مولانا فضل الرحمان سے ٹیلیفونک رابطہ کیا اور شہید بے نظیر بھٹو کے یوم شہادت پر27دسمبرکوگڑھی خدا بخش لاڑکانہ میں ہونے والے جلسے میں شرکت کی دعوت دی۔سابق صدر مملکت اور پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری نے جمعیت علمائے اسلام(ف)کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کوٹیلی فون کیا،جس میں دونوں رہنمائوں نے ملک کی مجموعی سیاسی صورت حال سمیت حکومت مخالف تحریک کے حوالے سے بھی اہم بات چیت کی۔آصف زرداری نے مولانا فضل الرحمان کو شہید بے نظیر بھٹو کے یوم شہادت پرگڑھی خدا بخش میں ہونے والے جلسے میں شرکت کی دعوت بھی دی۔

. 31جنوری کی ڈیڈ لائن بھی تبدیل اپوزیشن نے دھرنے اور مستعفی ہونے کی نئی تاریخ دیدی ..

dadaddadd

اپنا تبصرہ بھیجیں