گلگت بلتستان کے حوالے سے سیاسی جماعتوں کی میٹنگ آرمی چیف کی بجائے وزیراعظم کو بلانی چاہیے تھی،الیکشن میں ایجنسیوں کی مداخلت نہ ہو، پیپلز پارٹی کا وزیراعظم بارے بھی تہلکہ خیز مطالبہ

اسلام آباد (این این آئی)پاکستان پیپلزپارٹی کے مرکزی ر�نمائوں نے مطالب� کیا �ے ک� گلگت بلتستان کے الیکشن مقرر� وقت پر کروائے جائیں اور ان میں ایجنسیوں کی مداخلت ن� �و،ڈسٹرکٹ ریٹرننگ ا�سران کے لئے ایڈمنسٹریٹو ا�سران کی بجائے جوڈیشل ا�سران کو لگایا جائے، اسپیکر قومی اسمبلی کی طر� سے گلگت بلتستان کے حوالے سے پارلیمانی لیڈروں کا اجلاس بلانا ان کے دائر� اختیار

میں ن�یں آتا، پارلیمانی لیڈروں کا اجلاس لیڈر آ� �ائوس بلا سکتے �یں، آل پارٹیز کان�رنس کی تمام جماعتیں اسپیکر قومی اسمبلی کی طر� سے گلگت بلتستان کے حوالے سے بلائے گئے اجلاس میں شرکت ن�یں کریں گی،گلگت بلتستان میں ایجنسیوں کی طر� سے لوگوں پر دبائوڈال کر حکومت کی طر� سے صحت کارڈ تقسیم کرکے پری پول ریگنگ کی جا ر�ی �ے، گلگت بلتستان کے حوالے سے سیاسی جماعتوں کی میٹنگ آرمی چی� کی بجائے وزیراعظم کو بلانی چا�یے تھی اگر وزیراعظم کو اس میٹنگ میں ن�یں بلایا گیا یا خود ن�یں آئے تو اس پر ان�یں استع�یٰ دینا چا�یے کیونک� ی� سیاسی مینڈیٹ کی تو�ین کی گئی �ے۔ ان خیالات کا اظ�ار پاکستان پیپلزپارٹی سیکریٹری جنرل سید نیر حسین بخاری اور پاکستان پیپلزپارٹی پارلیمنٹرینز کے سیکریٹری جنرل �رحت الل� بابر نے مشترک� پریس کان�رنس کرتے �وئے کیا۔ ان کے �مرا� کے پی کے ڈپٹی سیکریٹری جنرل اعجاز دورانی، چی� میڈیا کوآرڈینیٹر نذیر ڈھوکی، ترجمان سیکریٹری جنرل راج� نور ال�ٰی ، نعیم کیانی ، ایڈووکیٹ راج� شکیل عباسی، صد� مرتضیٰ، ا�تخار ش�زاد� اورایڈووکیٹ سجاد علی منگی موجود تھے۔ نیر حسین بخاری نے ک�ا ک� آل پارٹیز کان�رنس 20ستمبر کو �وئی جس میں 26 نکات کا اعلامی� جاری �وا۔ جس پر 12جماعتوں نے ات�اق کیا اور ی� جماعتیں اعلامی� اور ایکشن پلان کی پابند �یں۔ اعلامیے میں گلگت بلتستان کے حوالے سے ک�ا گیا ک�

“اجلاس مطالبÛ� کرتا Û�Û’ Ú©Û� گلگت بلتستان میں مقررÛ� وقت پر صاÙ� Ùˆ Ø´Ù�اÙ� اور بغیر کسی مداخلت Ú©Û’ انتخابات کرائے جائیں، انتخابات Ú©Û’ بعد قومی اتÙ�اق رائے گلگت بلتستان Ú©Ùˆ قومی ØŒ سیاسی دھارے میں شامل کرنے Ú©Û’ لئے اقدامات اٹھائے جائیں۔ اجلاس قرار دیتا Û�Û’ Ú©Û� گلگت بلتستان کاعلاقÛ� بÛ�ت حساس Û�Û’ ÙˆÛ�اں اس علاقے میں ایجنسیوں Ú©ÛŒ مداخلت ختم Ú©ÛŒ جائے تاکÛ� کوئی بھی ان انتخابات

Ú©ÛŒ Ø´Ù�اÙ�یت پر اعتراض Ù†Û� اٹھا سکے۔ اجلاس Ù†Û’ Ù�یصلÛ� کیا Ú©Û� گلگت بلتستان Ú©Û’ انتخابات پر Ú¯Û�ری نظر رکھی جائے Ú¯ÛŒ”Û” نیر بخاری Ù†Û’ Ú©Û�ا Ú©Û� گلگت بلتستان کا الیکشن کمیشن پاکستان الیکشن کمیشن سے علیحدÛ� Û�Û’Û” 2017Ø¡ï¿¿ ایکٹ Ú©Ùˆ اپنایا Û�Û’ جو پاکستان میں ناÙ�ذالعمل Û�Û’Û” 15نومبر Ú©Ùˆ انتخابات Ú©ÛŒ تاریخ رکھی گئی Û�Û’ اور انتخابی عمل شروع Û�وگیا Û�Û’Û” Û�مارا Ú†ÛŒÙ� الیکشن کمیشن

گلگت بلتستان سے مطالب� �ے ک� ڈسٹرکٹ ریٹرننگ ا�یسر، ایڈمنسٹریشن ا�سران کو ن� لگایا جائے بلک� جوڈیشل ا�سران کو ریٹرننگ ا�سر لگایا جائے۔ اطلاعات �یں کی ایڈمنسٹریٹو ا�سران کو ریٹرننگ ا�سر لگایا جار�ا �ے۔ ان�وں نے ک�ا ک� گلگت بلتستان میں اینٹیلی جنس بیورو کے لوگ مداخلت کر ر�ے �یں اور ان کے ذریعے لوگوں پر پریشر ڈالا جا ر�ا �ے۔ ی� پری پول ریگنگ �ے۔ ان�وں نے ک�ا

ک� گلگت بلتستان قومی اسمبلی کے اسپیکر کے دائر اختیار میں ن�یں آتا اور و� اس حوالے سے پارلیمانی لیڈروں کا اجلاس ن�یں بلا سکتے اس حوالے سے لیڈر آ� �ائوس پارلیمانی لیڈروں کا اجلاس بلا سکتے �یں۔ چیئرمین سینیٹ کے پاس اس حوالے سے کوئی اختیارات ن�یں �یں۔ آل پارٹیز کان�رنس کی تمام جماعتیں اسپیکر قومی اسمبلی کی طر� سے گلگت بلتستان کے حوالے سے بلائے گئے

اجلاس میں شرکت ن�یں کریں گی۔ ان�وں نے ک�ا ک� �مار چی� الیکشن کمیشن سے مطالب� �ے ک� جو و�اقی وزراء گلگت بلتستان میں جا کر مداخلت کر ر�ے �یں ان کے جلسے جلوسوں پر پابندی لگائی جائے۔ ان�وں نے ک�ا ک� 15نومبر کو گلگت بلتستان کے پ�اڑوں پر بر� پڑ جاتی �ے اور و�اں کے ر�ائشی نقل مکانی کرکے میدانی علاقوں میں آجاتے �یں،الیکشن کمیشن کو ان کے ووٹ ڈالنے کے

حوالے سے بندوبست کرنا چا�یے۔ ان�وں نے ک�ا ک� گلگت بلتستان میں کوئی وجود ن�یں�ے اور الیکشن کمیشن اپنی ذم� داریاں نبھاتے �وئے جو وزراء اس میں مداخلت کر ر�ے �یں ان کے خلا� کارروائی کرے،2018ء کے الیکشن میں �م نے اپنے منشور میں دیا ک� گلگت بلتستان کے لوگوں کو ان کے آئینی حقوق دلائیں گے،1994ء میں پیپلزپارٹی نے پارٹی بنیادی پر الیکشن کروائے 2008ء

میں آص� علی زرداری نے وزیراعلیٰ اور انتظامی ڈھانچ� تشکیل دیا۔ ذوال�قار علی بھٹو نے پ�لی مرتب� و�اں کی ریاستوں کو گلگت بلتستان میں ضم کیا، �میں احساس �ے ک� گلگت بلتستان کی کیا آئینی ا�میت �ے۔ سید نیر حسین بخاری نے ایک سوال کا جواب دیتے �وئے ک�ا ک� چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو زرداری نے اسمبلی میں اپنی پ�لی تقریر میں ک�� دیا تھا ک� ی� وزیراعظم الیکٹڈ ن�یں سلیکٹڈ

�یں۔سینیٹر �رحت الل� بابر نے ک�ا ک� گلگت بلتستان میں �ونے والے انتخابات خصوصی ا�میت کے حامل �یں۔ ان انتخابات میں ان کے آئینی حقوق کے بارے میں �یصل� �وگا اور منتخب اسمبلی گلگت بلتستان کے بارے میں �یصل� کرے گی۔ جو صا� ش�ا� الیکشن سے �ی معرض وجود میں آسکتا �ے۔ انتخابات میں کسی بھی ایجنسی کی مداخلت ن�یں �ونی چا�یے۔ گلگت بلتستان کو صوبے کا نام ن�یں

دیا گیا تا�م پیپلزپارٹی نے اسے وزیراعلیٰ، اسمبلی اور تمام مراعات �را�م کیں۔ ان�وں نے ک�اک� کسی کو کوئی اختیار ن�یں ، ی� سیاسی پارٹیاں �ی گلگت بلتستان کے حوالے سے �یصل� کریں گی۔ ان�وں نے ک�ا ک� گلگت بلتستان کے حوالے سے میٹنگ آرمی چی� کی بجائے

وزیراعظم کو بلانی چا�یے تھی اگر ان کو آرمی چی� کی بلائی �وئی میٹنگ میں ن�یں بلایا گیا یا و� خود ن�یں آئے تو و� استع�ی دیں۔ آرمی چی� نے میٹنگ سکیورٹی معاملات پر بات کرنے کے لئے بلائی لیکن گلگت بلتستان کے حوالے سے بات کی گئی۔

. گلگت بلتستان کے حوالے سے سیاسی جماعتوں کی میٹنگ آرمی چی� کی بجائے وزیراعظم کو بلانی چا�یے تھی،الیکشن میں ایجنسیوں کی مداخلت ن� �و، پیپلز پارٹی کا وزیراعظم بارے بھی ت�لک� خیز مطالب� ..

dadaddadd

اپنا تبصرہ بھیجیں